امریکہ

روس نے یوکرین میں جنگی جرائم کا ارتکاب کیا،امریکہ

واشنگٹن(رپورٹنگ آن لائن)ایک ایسے وقت میں جب ماسکو یوکرین کی افواج پر حال ہی میں پکڑے گئے روسی فوجیوں کے خلاف جنگی جرم کے ارتکاب کا الزام لگا رہا ہے امریکی محکمہ خارجہ نے روس پر بھی ایسے ہی الزامات عائد کیے ہیں۔میڈیارپورٹس کے مطابق امریکی محکمہ خارجہ نے ایک بریفنگ میں کہا کہ روس نے یوکرین میں بڑے پیمانے پر لوگوں کو قتل کیا ہے۔اس نے یوکرین میں شہریوں پر حملوں اور ان کی ملک بدری کے واقعات کی تحقیقات کے لیے حمایت کی بھی تصدیق کی اور کئیف کی جانب سے جنگ زدہ علاقوں میں شہریوں کی جبری ملک بدری کے سابقہ الزامات کا حوالہ دیا۔گذشتہ اتوار کو یوکرین کے صدر ولادیمیر زیلنسکی نے روس پر جنوبی خیر سون کے علاقے میں “سیکڑوں جنگی جرائم” کا ارتکاب کرنے کا الزام لگایا تھا۔

انہوں نے کہا کہ تفتیش کاروں نے 400 سے زیادہ روسی جنگی جرائم کی دستاویزات جمع کیں اور شہریوں اور فوجیوں کی لاشیں برآمد کیں۔دوسری جانب روس نے گذشتہ ہفتے اعلان کیا تھا کہ یوکرینی فوجیوں نے 10 سے زائد روسی جنگی قیدیوں کو پھانسی دے دی ہے۔ روس نے مغرب پر الزام لگایا کہ انہوں نے یوکرینی فوج کے ہاتھوں مبینہ جنگی جرائم کو نظر انداز کیا۔کیف نے بعد میں اس الزام کا جواب دیتے ہوئے اس بات کا اشارہ دیا کہ وہ ان “مبینہ خلاف ورزیوں” کی تحقیقات کرے گا۔