عتیقہ اوڈھو

بیٹے نے زائد العمری میں شادی کا مشورہ دیا تھا، عتیقہ اوڈھو

کراچی (رپورٹنگ آن لائن) سینئر اداکارہ عتیقہ اوڈھو نے انکشاف کیا ہے کہ انہیں زائد العمری میں تیسری شادی کا مشورہ ان کے جواں سالہ بیٹے نے دیا تھا۔عتیقہ اوڈھو نے 2012ء میں سیاستدان اور سماجی رہنماء ثمر علی خان سے تیسری شادی کی تھی۔عتیقہ اوڈھو نے نجی ٹی وی کے ایک پروگرام میںاپنی ازدواجی زندگی سے متعلق بتایا کہ ان اور ثمر علی خان کے درمیان شادی سے قبل بہت اچھے تعلقات تھے، دونوں سماجی خدمت کے کاموں کیلئے دور دراز علاقوں کا سفر بھی کرتے رہے تھے۔اداکارہ کے شوہر ثمر علی خان نے بتایا کہ اگرچہ انہیں عتیقہ اوڈھو سے محبت ہو چکی تھی مگر ان کی عزت اور بھرم رکھنے کے لیے انہوں نے کبھی ان سے اظہار محبت نہیں کیا اور خاموشی سے ان کے ساتھ رہے۔

اداکارہ نے ایک سوال کے جواب میں بتایا کہ انہیں ثمر علی خان کے ساتھ کام کرتا دیکھ کر ان کے بیٹے نے مشورہ دیا کہ وہ ان سے شادی کرلیں۔عتیقہ اوڈھو نے بتایا کہ خواتین کو اپنے بچوں کے ساتھ اس طرح تعلقات رکھنے چاہیے کہ وہ ان کی اولاد سے زیادہ ان کے دوست بن جائیں اور یہی وجہ ہے کہ ان کا سہارا ان کے بچے بنے۔اداکارہ نے بتایا کہ بیٹے کے مشورے کے بعد وہ ثمر علی خان کو کافی پلانے کیلئے باہر لی گئیں اور انہوں نے وہیں انہیں شادی کی پیش کش کردی۔عتیقہ اوڈھو کے مطابق انہوں نے مختصر الفاظ میں واضح انداز میں ثمر علی خان کو کہا کہ ہمیں شادی کرلینی چاہیے، جس پر ان کے شوہر پہلے کچھ گھبراگئے لیکن پھر جلد ہی ہاں کردی اور کہا کہ ٹھیک ہے، شادی کرلیتے ہیں۔اداکارہ نے انکشاف کیا کہ ان کے نکاح نامے پر ان کے بیٹے اور داماد سمیت ثمر علی خان کے بیٹے نے بطور گواہ دستخط کئے ،جب میں نے نکاح نامے پر دستخط کیے تو نواسہ ان کی گود میں تھا۔