رمضان شوگر ملز کیس

رمضان شوگر ملز کیس،وزیر اعظم شہباز شریف کی مستقل حاضری معافی کی درخواست منظور

لاہور (رپورٹنگ آن لائن) احتساب عدالت نے رمضان شوگر ملز کیس میں شہباز شریف کی مستقل حاضری معافی کی درخواست منظور کرلی۔ لاہور کی احتساب عدالت کے جج ساجد اعوان نے وزیراعظم کی حاضری سے مستقل استثنی کی درخواست پر فیصلہ سنایا۔

رمضان شوگرمل ریفرنس کیس میں وزیراعظم شہبازشریف عدات میں پیش ہوئے جبکہ حمزہ شہباز کی لیگل ٹیم کی طرف سے ان کی کی حاضری معافی کی درخواست دائرکی گئی جس میں موقف پیش کیا گیا کہ بجٹ سیشن میں مصروفیت کے باعث حمزہ شہبازعدالت پیش نہیں ہوسکتے۔

حمزہ شہباز کی لیگل ٹیم نے عدالت سے درخواست میں استدعا کی کہ حمزہ شہباز کی ایک روز کی حاضری معافی کی درخواست منظور کی جائے۔ وزیراعظم کے وکیل نے مستقل حاضری معافی کی درخواست پر دلائل دیتے ہوئے عدالت سے کہا کہ شہباز شریف کی اسی عدالت سے پہلے بھی مستقل حاضری معافی کی درخواست منظورہو چکی ہے۔ وکیل امجد پرویز نے دلائل دیے کہ شہباز شریف نے کبھی مستقل حاضری معافی کا غلط استعمال نہیں کیا۔ شہباز شریف کی جگہ پلیڈرمقررکردیا جائے تاکہ کیس چلتا رہے۔

وکیل وزیراعظم نے کہا کہ اب شہباز شریف اللہ کی مہربانی سے وزیراعظم بن گئے ہیں۔ ان کی ذمہ داریاں ہیں انہیں وہ پوری کرنی ہیں۔ شہباز شریف مسلسل عدالتوں میں پیش ہوتے آئے ہیں۔ سماعت کے دوران نیب کے پراسیکیوٹرنے شہباز شریف کی مستقل حاضری معافی کی درخواست کی مخالفت کرتے ہوئے کہا کہ شہبازشریف کو مستقل حاضری معافی دینے کی ٹھوس وجوہات نہیں ہیں۔

نیب پراسیکیوٹرنے دلائل دیے کہ شہبازشریف کا حاضری معافی کی درخواست میں میڈیکل سرٹیفکیٹ بھی نہیں دیا گیا۔ عدالت نے وزیراعظم کی حاضری سے مستقل استثنی کی درخواست پر فیصلہ محفوظ کرتے ہوئے انھیں جانے کی اجازت دی۔